اقوامِ متحدہ نے پاکستان کی امداد میں پانچ گنا اضافہ کر دیا

27 ستمبر کو سندھ کے ضلع دادو میں ایک طبی اہلکار سیلاب سے بےگھر ہونے والے ایک بچے کو طبی امداد دے رہا ہے (اے ایف پی)

ایک عہدے دار نے پیر کو بتایا ہے کہ اقوام متحدہ نے پاکستان کے لیے اپنی انسانی ہمدری کی بنیاد پر امداد کی اپیل کو 16 کروڑ ڈالر سے پانچ گنا بڑھا کر 81 کروڑ 60 ڈالر کر دیا ہے۔

خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق پاکستان کئی دہائیوں میں میں آنے والے بدترین سیلاب کے بعد پانی سے پیدا ہونے والی بیماریوں کے پھیلاؤ پر قابو پانے کی کوشش کر رہا ہے۔

مون سون کی شدید بارشوں اور گلیشیئر پگھلنے کی وجہ سے آنے والے سیلاب کی وجہ سے پاکستان میں تقریباً 1700 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

حکومت پاکستان اور اور اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ سیلاب کا سبب موسمیاتی تبدیلی ہے۔

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

انسانی ہمدردی کی بنیاد پر امداد کے حوالے سے پاکستان کے لیے اقوم متحدہ رابطہ افسر جولیئن ہارنائس نے جنیوا میں بریفنگ میں بتایا کہ ’ہم موت اور تباہی کے دوسرے مرحلے میں داخل ہو رہے ہیں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ ’اگر ہم نے متاثرہ علاقوں میں صحت، غذا، پانی اور صفائی کی خدمات کی فراہمی میں اضافے کے لیے حکومت کی مدد کرنے کی خاطر تیزی سے کام نہ کیا تو بچوں کی بیماریوں میں اضافہ ہو گا اور یہ بہت خوفناک ہو گا۔‘

زیادہ پڑھی جانے والی معیشت