دو ماہ قبل تنخواہوں میں اضافہ ہوا، دوبارہ نہیں کر رہے: مفتاح

سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافے کے بارے میں شہباز شریف نے قومی اسمبلی میں بطور وزیراعظم منتخب ہونے کے بعد اپنے پہلے خطاب میں اعلان کیا تھا۔

شہباز شریف کو وزیراعظم ہاؤس آنے پر گارڈ آف آرنر دیا گیا (اے ایف پی)

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما مفتاح اسماعیل نے وزیراعظم شہباز شریف کی جانب سے تنخواہوں میں اضافے کے بیان پر واضح کیا ہے کہ سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں کوئی اضافہ نہیں کیا جا رہا ہے۔

وفاق میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافے کے بارے میں شہباز شریف نے قومی اسمبلی میں بطور وزیراعظم منتخب ہونے کے بعد اپنے پہلے خطاب میں اعلان کیا تھا۔

وزیراعظم شہباز شریف نے اعلان کیا تھا کہ وہ سرکاری ملازمین کی کم سے کم تنخواہ 25 ہزار کر رہے ہیں جبکہ اس کے ساتھ ہی پینشنز میں بھی اضافہ کیا جا رہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ تنخواہوں اور پینشز میں اس اضافے کا اطلاق یکم اپریل سے ہوگا۔

تاہم گذشتہ روز یہ خبر سامنے آئی کے وزیراعظم شہباز شریف نے تنخواہوں میں اضافے کے حوالے سے ’یوٹرن‘ لے لیا ہے۔

اس حوالے سے مسلم لیگ ن کے سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے ایک ٹویٹ میں کہا ہے کہ ’کوئی یو ٹرٹ نہیں لیا جا رہا۔‘

انہوں نے لکھا کہ ’دو ماہ قبل وفاقی سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ کیا گیا تھا اس لیے ہم اس میں دوبارہ اضافہ نہیں کر رہے۔‘

’تاہم ان کی تنخواہوں کے مسئلے پر آئندہ بجٹ میں غور کیا جائے گا۔‘

مفتاح اسماعیل نے بتایا کہ ’ہم نے ریٹائرڈ سرکاری ملازمین کی پینشن میں اضافہ ضرور کر دیا ہے۔ مجھے یقین ہے اس سے سب واضح ہو جائے گا۔‘

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

واضح رہے کہ وزیراعظم شہباز شریف نے گذشتہ روز وزیراعظم ہاؤس میں اپنے پہلے ہی دن وفاق میں ہفتہ وار دو چھٹیوں کو کم کر کے ایک کرنے کا اعلان کیا تھا۔

ساتھ میں انہوں نے سرکاری دفاتر کے اوقات کار میں تبدیلی کرتے ہوئے دس بجے کے بجائے صبح آٹھ بجے سے کام شروع کرنے کا بھی کہا۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے مفتاح اسماعیل کی اسی ٹویٹ کے جواب میں لکھا کہ ’پہلی تقریر میں ہی شوبازیاں دکھا کر اگلے دن u-turn لے لیا گیا۔‘

عثمان بزدار نے بھی ٹوئٹر پر ہی لکھا کہ ’پچھلے سال پی ٹی آئی حکومت نے تنخواہوں میں 35 فیصد اضافہ کیا جس میں دس فیصد بنیادی تنخواہ میں اضافے کےساتھ 25 فیصد ڈسپیریٹی/سپیشل الاؤنس شامل تھا۔‘

انہوں نے مزید لکھا کہ ’اس سال وفاق میں مزید 15 فیصد اضافے کا نوٹیفکیشن اور 15 فیصد کا اعلان ہوچکا تھا۔‘

زیادہ پڑھی جانے والی پاکستان