انڈیا: خاتون کی سوٹ کیس میں لاش ملنے کے بعد والدین گرفتار

پولیس نے پیر کو کہا کہ خاتون کو اس وجہ سے قتل کیا گیا کیوں کہ انہوں نے والدین کی خواہشات کے برعکس اپنی مرضی کے شخص کے ساتھ شادی کر لی تھی۔

پولیس اس مقام کا معائنہ کر رہی ہے جہاں 4 نومبر 2022 کو ایک سیاسی رہنما کو قتل کیا گیا تھا (اے ایف پی)

انڈیا کی ریاست اترپردیش کے شہر متھرا میں ایک خاتون کی ہلاکت پر پیر کی رات ان کے والدین کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ شبہ ہے کہ خاتون کو غیرت کے نام پر قتل کیا گیا ہے۔

21 سالہ آیوشی یادو کی لاش 18 نومبر کو متھرا میں یمنا ایکسپریس وے پر سرخ رنگ کے ٹرالی بیگ کے اندر سے ملی تھی۔

غیرت کے نام پر قتل عام طور پر کسی بھی فرد کے خاندان کے افراد کے ہاتھوں ہونے والا قتل ہوتا ہے۔ ایسے فرد کو قتل کیا جاتا ہے جس کے بارے میں سمجھا جاتا ہے کہ وہ خاندان کی شرمندگی کا سبب بنا ہے۔

پولیس نے پیر کو کہا کہ خاتون کو اس وجہ سے قتل کیا گیا کیوں کہ انہوں نے والدین کی خواہشات کے برعکس اپنی مرضی کے شخص کے ساتھ شادی کر لی تھی۔

قائم مقام سینیئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس مارٹنڈ پرکاش سنگھ نے خبر رساں ادارے پریس ٹرسٹ آف انڈیا کو دیے گئے بیان میں کہا کہ ’ہلاک ہونے والی خاتون کے والد نتیش یادو اور والدہ برج بالا یادو کو گرفتار کے جیل بھیج دیا گیا ہے۔‘

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

سنگھ کا کہنا تھا کہ ملزمان پر انڈیا کے ضابطہ فوجداری جسے تعزیرات ہند کے طور پر جانا جاتا ہے، کی دو دفعات لگائی گئی ہیں۔ ان پر جو دفعات لگائی گئی ہیں ان میں 302 (قتل کی سزا) اور 201 (جرم کے شواہد غائب کرنا یا مجرم کو چھپانے کے لیے غلط معلومات دینا) شامل ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ’ہو سکتا ہے کہ برج بالا یادو نے اپنی بیٹی کو گولی نہ ماری ہو لیکن لاش کو ٹھکانے لگانے میں ملوث تھیں اور کار میں خاوند کے ساتھ متھرا گئیں۔‘

ہلاک ہونے والی خاتون کو 17 نومبر کو دارالحکومت نئی دہلی کے علاقے بدرپور میں واقع ان کے گھر میں مبینہ طور پر طور پر ان کے والد نے گولی ماری۔ حکام کا کہنا ہے کہ خاتون کے بھائی کو بھی قتل کا علم تھا۔

پولیس نے کہا کہ والد نے مودبند نامی گاؤں میں اپنی رہائش گاہ پر بیٹی کو گولی مار کر ہلاک کرنے کا اعتراف کیا ہے۔ انہوں نے اسی رات لاش کو ٹرالی بیگ میں ڈالا اور اسے یمنا ایکسپریس وے پر چھوڑ دیا۔

وہ ٹرالی بیگ جس میں خاتون کی لاش تھی ملنے کے بعد پولیس نے ان کی شناخت کے لیے موبائل فونز کا پتہ لگایا اور سرویلینس کیمروں کی فوٹیج دیکھی۔

ایک نامعلوم شخص نے فون پر اطلاع دی کہ لاش آیوشی نامی خاتون کی ہے۔ بعد میں خاتون کی والدہ اور بھائی نے تصاویر کی مدد سے انہیں شناخت کیا۔ پولیس نے کہنا ہے کہ وہ لائسنس یافتہ بندوق بھی برآمد کر لی ہے جس سے خاتون کو مارا گیا ہے۔

© The Independent

زیادہ پڑھی جانے والی ایشیا