فلم سیٹ پر گولی چلنے کا واقعہ: اداکار بالڈون کی خاموشی ختم

ایلیک بالڈون نے ورمونٹ میں سڑک کے کنارے ایک رپورٹر سے مختصر بات چیت میں کہا کہ وہ ہیلینا ہچنس کے شوہر میتھیو کے ساتھ ’مسلسل رابطے میں‘ ہیں، اور ان کے خاندان کے بارے میں ’بہت فکر مند‘ ہیں۔

سانتا فے کاؤنٹی میں مذکورہ واقعے کے بعد پریس کانفرنس سے پہلے کا  ایک منظر (تصویر: اے ایف پی)

ہالی وڈ اداکار ایلیک بالڈون نے فلم ’رسٹ‘ کے سیٹ پر سہواً گولی چل جانے کے بعد واقعے پر پہلی بار بات کی۔

ان کی آواز ناہموار اور چہرہ غم سے بھرا ہوا تھا۔ بالڈون نے ’بیک گرڈ‘ کی طرف سے موجود رپورٹر کو بتایا کہ انہیں پولیس حکام کی جانب سے اس حادثاتی شوٹنگ کے بارے میں بات کرنے سے روک دیا گیا تھا۔

’وہ میری دوست تھی‘ ایلیک بالڈون نے ہیلینا ہچنس کے بارے میں کہا، ’ایک 42 سالہ شادی شدہ ماں، جو 14 اکتوبر کو بونانزا ساحلی علاقے میں ماری گئی تھیں۔‘

انہوں نے کہا کہ فلم کے سیٹ پر وقتاً فوقتاً حادثات ہوتے رہتے ہیں لیکن ایسا کبھی نہیں ہوتا۔ ’یہ دس کھرب واقعات میں سے ایک بار ہو سکتا ہے، کھربوں واقعات میں ایک۔‘

ایلیک بالڈون نے ورمونٹ میں سڑک کے کنارے ایک رپورٹر سے مختصر بات کرنے پر رضامندی ظاہر کی کیونکہ ان کی اہلیہ ہلیریا قریب ہی اپنے سیل فون پر اس اچانک ملاقات کی فلم بندی کر رہی تھی۔

بالڈون نے کہا کہ وہ اس معاملے پر محدود بات ہی کر سکتے ہیں۔

’مجھے کوئی تبصرہ کرنے کی اجازت نہیں ہے کیونکہ یہ ایک فعال تفتیش ہے۔ ایک عورت مر گئی۔ وہ میری دوست تھی، وہ میری دوست تھی،‘

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

’جب میں شوٹنگ شروع کرنے کے لیے سانتا فے پہنچا تو میں انہیں رات کے کھانے پر لے گیا، جب یہ خوفناک واقعہ پیش آیا تو ہم ایک بہت مشاق عملے کے ساتھ مل کر ایک فلم کی شوٹنگ کر رہے تھے۔‘

بالڈون  19ویں صدی میں بنائی گئی مغربی فلم رسٹ میں پروڈیوسر ہونے کے ساتھ ساتھ بندوق بردار کردار کے طور پر بھی نظر آئے۔

جب فلم کے سیٹوں پر اصلی آتشیں اسلحے کے استعمال کو ختم کرنے کے لیے بڑھتی ہوئی حمایت کے بارے میں پوچھا گیا تو بالڈون نے کہا کہ وہ اس اقدام کی حمایت کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا ’سیٹ پر آتشیں اسلحے کے استعمال کو محدود کرنے کی مسلسل کوششوں سے مجھے آگاہی ہے اور مجھے اس مین بہت دلچسپی بھی ہے۔‘

بالڈون نے کہا کہ وہ ہیلینا ہچنس کے شوہر میتھیو کے ساتھ ’مسلسل رابطے میں‘ ہیں، اور ان کے خاندان کے بارے میں ’بہت فکر مند‘ ہیں۔

© The Independent

زیادہ پڑھی جانے والی فلم