ماں نے 500 ڈالرز کے عوض میرا ریپ کروایا: ڈیمی مور

اداکارہ نے یہ دعویٰ  24 ستمبر کو جاری ہونے والی اپنی یادداشتوں پر مبنی کتاب ’ان سائیڈ آؤٹ‘ میں کیا۔ ۔

ڈیمی مور (اے ایف پی)

ہالی وڈ اداکارہ، نغمہ نگار اور ماڈل ڈیمی مورنے دعویٰ کیا ہے کہ 15 برس کی عمر میں ان کا ریپ کیا گیا اور ایسا کرنے والے شخص نے ان کی والدہ کو پانچ سو ڈالرز دیے۔

اداکارہ نے یہ دعویٰ  24 ستمبر کو جاری ہونے والی اپنی یادداشتوں پر مبنی کتاب ’ان سائیڈ آؤٹ‘میں کیا۔ یہ کتاب ڈائیان سائیر کی میزبانی میں مارننگ شو ’گڈ مارننگ امریکہ‘ میں زیر بحث آئی۔

سائیر نے ویڈیو کلپ پر وائس اوور میں وضاحت کی کہ مور کی والدہ انہیں’شراب خانوں میں لے جاتی تھیں، جہاں وہ دونوں مردوں کی نظر میں آتیں۔ جب ایک رات وہ واپس آئیں تو اپارٹمنٹ میں بڑی عمر کا ایک شخص جسے وہ جانتی ہیں، چابی لیے موجود تھا‘۔

سائیر نے جی ایم اے میں انکشاف کیا ’(ڈمی مور) لکھتی ہیں، یہ ان کا ریپ تھا اور دغابازی تھی۔‘ اس کے بعد ریپ کرنے والے شخص نے مبینہ طور پر مور سے کہا ’اپنی ماں کی طرف سے پانچ سو ڈالرز میں جسم فروش بنائے جانے پر کیسا محسوس ہو رہا ہے؟‘

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

کلپ چلنے کے بعد سائیر نے مور سے پوچھا کیا وہ سمجھتی ہیں ان کی والدہ نے انہیں’فروخت‘ کیا تھا؟ اس پر مور نے جواب دیا، ’میرا نہیں خیال کہ یہ سیدھی سادی سودے بازی تھی، لیکن اس باوجود والدہ نے اس شخص کو رسائی دی اور مجھے خطرے کے حوالے کر دیا۔‘

انٹرویو میں مور اور سائیر نے ان کی والدہ کی کئی بار خود کشی کی کوشش پر بھی بات کی۔ اس حوالے سے اداکارہ نے ستمبر کے شروع میں ہارپرز بازار میگزین کی لینا ڈنہام کے ساتھ بات کی تھی۔

© The Independent

زیادہ پڑھی جانے والی فلم