جب ایک بڑی فلم دی راک کی بجائے ٹام کروز کو مل گئی

2012 میں لی چائلڈ کے ناول پر بننے والی فلم 'جیک ریچر' کی ہدایات کرسٹوفر میکوئری نے دی تھیں۔

ڈوین جانسن کہتے ہیں کہ  اب میں شکرگزار ہوں کہ مجھے جیک ریچر کا کردار نہیں دیا گیا۔ (تصاویر: اے ایف پی)

ہالی وڈ اداکار اور سابق ریسلر ڈوین جانسن (دی راک) نے انکشاف کیا ہے کہ ایک بڑی فلم میں وہ ایک ایسا کردار کرنے سے محروم رہ گئے جس کے لیے وہ خود کو موزوں سمجھتے تھے اور یہ کردار ان کی بجائے اداکار ٹام کروز کو دے دیا گیا۔

کرونا (کورونا) وائرس کے باعث ہونے والے لاک ڈاؤن کے دوران اداکار نے اپنے مداحوں کو فیس بک پر سوال جواب کے ایک سیشن میں اس بات سے آگاہ کیا۔

یہ بتاتے ہوئے کہ فلم کیسے ان کے ہاتھ سے نکلی ڈوین جانسن کہتے ہیں: 'ہالی وڈ میں اداکار اپنے اپنے خانوں میں محدود ہیں۔ کچھ اداکار ہیں جو کچھ مخصوص کردار کے لیے یقینی ہیں جس کی وجہ ان کی شکل صورت، رنگت، جسامت وغیرہ ہیں۔ میری خوش قسمتی ہے کہ فلم انڈسٹری میں میری طرح دکھنے والے زیادہ لوگ نہیں ہیں۔ میں اپنے کیریئر کے آغاز سے ہی بہت خوش قسمت رہا ہوں۔ میرے لیے کردار تخلیق ہو چکے ہیں سوائے جیک ریچر کے۔'

2012 میں لی چائلڈ کے ناول پر بننے والی فلم 'جیک ریچر' کی ہدایات کرسٹوفر میکوئری نے دی تھیں۔ فلم کی یہ ٹیم 2016 کے سیکوئل 'نیور لُک بیک' کے لیے دوبارہ اکٹھی ہوئی تھی۔

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

اب سامنے آیا ہے کہ دی راک جانسن تسلیم کرتے ہیں کہ 'میں دس سال پہلے الگ مقام پر تھا' اور 'سوچتا تھا کہ مجھے یہ کردار آسانی سے مل سکتا ہے کیونکہ میرا قد و قامت اس کردار کے مطابق ہے۔'

ان کا مزید کہنا تھا کہ 'مجھے کال کی گئی جس میں کہا گیا کہ آپ کو یہ کردار نہیں مل سکا۔ میں نہیں جانتا تھا کہ مجھے یہ مل سکتا تھا یا نہیں لیکن میرے ارد گرد موجود لوگوں نے مجھے یہ سوچنے پر مجبور کیا کہ یہ مجھے مل سکتا ہے۔ میں سوچتا تھا کہ میں یہ کردار کیوں نہیں کرسکتا؟ ٹام کروز اس وقت دنیا کے سب سے بڑے فلم سٹار تھے جو کہ میں نہیں تھا۔'

اس کے باوجود جانسن کے لیے یونیورسل کی فلم فاسٹ اینڈ فیوریس فائیو میں ہابز کا کردار تخلیق کیا گیا۔ ایسا کردار جس نے انہیں باکس آفس پر بہت بڑا نام بننے میں مدد دی ہے۔ گذشتہ سال ہی انہیں نے ہابز اینڈ شا کی نئی فلم میں جیسن سٹیتھم کے ساتھ اداکاری کے جوہر دکھائے ہیں۔

ڈوین جانسن کہتے ہیں: 'میں یہ سوچنے میں حق بجانب ہوں کہ جیک ریچر کا کردار جو کہ ایک معروف کردار تھا اور دنیا بھر میں پسند کیا جاتا تھا میں اس میں اپنی تخلیقی صلاحیتوں کا اس حد تک مظاہرہ نہ کر سکتا جتنا میں چاہتا تھا۔ میں شکرگزار ہوں کہ مجھے جیک ریچر کا کردار نہیں دیا گیا۔'

© The Independent

زیادہ پڑھی جانے والی فلم