فیس بک کی گروپس کو محفوظ رکھنے سے متعلق نئی تبدیلیاں

اس سلسلے میں فیس بک کی جانب سے سفارش شدہ گروپس میں تبدیلی لائی جائے گی اور ایسے گروپس کی رسائی بھی محدود کی جائے گی جو قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہیں۔

(فیس بک)

فیس بک نے گروپس کو محفوظ رکھنے سے متعلق نئی تبدیلیوں کا اعلان کر دیا ہے جس کے تحت کمیونٹی سٹینڈرڈز کی خلاف ورزی کرنے والے گروپس کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

اس سلسلے میں فیس بک کی جانب سے سفارش شدہ گروپس میں تبدیلی لائی جائے گی اور ایسے گروپس کی رسائی بھی محدود کی جائے گی جو قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہیں۔

نئی پالیسیاں غلط معلومات اور نفرت انگیز اظہار جیسے نقصان دہ مواد کے خاتمے کے لیے جاری کاوشوں کا حصہ ہیں جس کے تحت ان مخصوص گروپس کو چلانا یا انہیں تلاش کرنا زیادہ مشکل ہوگا، چاہے وہ پبلک یا پرائیویٹ گروپ ہوں۔ جب کوئی گروپ بار بار قوانین کی خلاف ورزی کرتا ہے تو فیس بک اسے مکمل طور پر ہٹا دیتا ہے۔ 

فیس بک کے وائس پریذیڈنٹ آف انجینئرنگ، ٹام ایلیسن نے اپنی پوسٹ میں کہا، ’ہم جانتے ہیں کہ جب ہم مواد کے لیے زور دیتے ہیں یا سفارش کرتے ہیں تو ہمارے اوپر بڑی ذمہ داری عائد ہوتی ہے۔ ہم اپنے کام میں اس بات کو یقینی بناتے ہیں کہ لوگوں کو ممکنہ طور پر نقصان دہ گروپس کی سفارش نہ کی جائے، ہم ایک جیسے موضوعات پر اعلیٰ معیار کے گروپس کو سزا نہ دینے سے متعلق محتاط رہنے کی کوشش کرتے ہیں۔ یہ تناؤ ہمارے کاروباری مفادات اور کم معیاری گروپس کو ہٹانے سے متعلق نہیں ہے بلکہ ممکنہ طور پر نقصان دہ گروپس کے خلاف کارروائی سے متعلق ہے جبکہ اس کے ساتھ ساتھ یہ بھی بدستور یقینی بنایا جاتا ہے کہ کمیونٹی لیڈرز اصولوں کی پاسداری کرکے اپنے گروپ کو آگے بڑھا سکیں اور لوگوں کی زندگیوں میں اہمیت پیدا کریں۔ ہم اپنی سفارشی ہدایات کو احتیاط سے متوازن بناتے ہیں۔‘

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

اگرچہ لوگ نئے گروپ میں اپنے فرینڈز کو مدعو کرسکتے ہیں یا ان کے لیے تلاش کرسکتے ہیں۔ فیس بک نے اب عالمی سطح پر ان پابندیوں میں توسیع کا آغاز کر دیا ہے۔ یہ پابندیاں سفارشات کی بنیاد پر تیار کی گئی ہیں، جیسے ہیلتھ گروپس کو ہٹانے کے ساتھ ساتھ بعض ایسے گروپس بھی ہیں جو بار بار غلط معلومات شیئر کرتے ہیں۔

فیس بک اپنی پالیسیوں کے نفاذ میں مزید احتیاط کا بندوبست بھی کر رہا ہے۔ جب کوئی گروپ اس کے قوانین کی خلاف ورزی شروع کرتا ہے تو پھر وہ سفارشات میں نچلی سطح پر ظاہر ہونے لگتا ہے۔ اس کا مطلب ہے کہ اب لوگ اسے کم تلاش کر پائیں گے۔ یہ بالکل فیس بک کی نیوز فیڈ سے ملتا جلتا طریقہ ہے جس میں ظاہر ہونے والی کم معیار کی پوسٹس مزید نیچے چلی جاتی ہیں تاکہ لوگ انہیں کم دیکھیں۔ شدید نقصان کے واقعات میں بوقت ضرورت فیس بک ان درمیانی مراحل کے بغیر ہی مکمل طور پر گروپس اور لوگوں کو ہٹا دے گا۔

ٹام نے اپنی پوسٹ کے اختتام پر کہا، ’فیس بک گروپس کو محفوظ رکھنے کے لیے ہمیشہ سے مزید بہتری کی ضرورت رہے گی اور ہم اسے تعمیر کرنے اور اس میں سرمایہ کاری کے ذریعے اس بات کی یقین دہانی کراتے ہیں کہ لوگ ان مقامات پر رابطوں اور تعاون کے لئے بھروسہ کرسکتے ہیں۔‘

زیادہ پڑھی جانے والی سوشل