کم دھونے سے بال مضبوط اور  لمبے ہوتے ہیں: ماہرین

ماہرین بالوں کی صحت اور نشونما کے لیے کیا تجویز کرتے ہیں جانیے اس رپورٹ میں۔

لمبے اور مضبوط بالوں کا انحصار صرف ان مصنوعات پر نہیں ہوتا جو آپ استعمال کرتے ہیں بلکہ اس پر بھی منحصر ہے کہ آپ کیا کھاتے ہیں (پکسا بے)

جب آپ گھنے اور لمبے بال رکھنے کی کوشش کرتے ہیں تو ایسا لگتا ہے کہ اس مقصد کو پانے میں عمر لگ جائے گی۔

امریکن اکیڈمی آف ڈرماٹولوجی اینڈ ہیئر ڈرماٹولوجی کے مطابق بال سالانہ تقریباً 15 سینٹی میٹر بڑھتے ہیں لیکن جب اس بات پر غور کریں کہ ایک دن میں50 سے100 بال گرتے ہیں تو لگتا ہے یہ بہت کم بڑھتے ہیں۔

اگرچہ لگتا ہے کہ کچھ لوگوں کے بال راتوں رات لمبے اور قابل رشک ہو جاتے ہیں لیکن کچھ  لوگوں کو اس کے لیے بالوں کی روزمرہ کی غذا اور دیکھ بھال کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔

جیسا کہ مختلف اقسام کے برش کا استعمال، بالوں کے نقصان کو کم کرنے کے لیے ڈرائر کی فریکوئنسی کو ایڈجسٹ کرنا، بالوں کی نشوونما والے تیل یا غذائی اجزا کا استعمال، بالوں کو صحت مند اور نرم رکھنے کے لیے ریشمی تکیے پر سونا، بالوں کو لمبا اور گھنا بنانے کے لیے گھریلو ٹوٹکوں کا استعمال وغیرہ۔

بالوں کو تیزی سے بڑھانے کے لیے ماہرین یہ مشورے دیتے ہیں۔

اپنے بال باقاعدگی سے کاٹیں

یہ بات شاید غیر منطقی لگے لیکن اگر آپ واقعی صحت مند اور لمبے بال چاہتے ہیں تو آپ کو اپنے بالوں میں باقاعدگی سے کنگھی کرنی پڑے گی۔

لاس اینجلس کے ہیر ڈریسر مائیکل ڈوئناس بتاتے ہیں کہ ’بال کٹوانے سے ان کی نشوونما تو نہیں ہوتی لیکن بالوں کو توڑنے والے فریز سے ضرور چھٹکارا مل جاتا ہے۔‘

ایک بار جب یہ ظاہری فریکچر ختم ہو جائیں گے تو ایسا لگے گا کہ آپ کے بال تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔

تاہم فریز اور دو منہ والے بال، جس کی وجہ سے بال ٹوٹتے اور بالآخر چھوٹے ہو جاتے ہیں، بالوں کی چمک، حجم اور نرمی کو نقصان پہنچاتے ہیں۔

اپنی غذا مناسب رکھیں

لمبے اور مضبوط بالوں کا انحصار صرف ان مصنوعات پر نہیں ہوتا جو آپ استعمال کرتے ہیں۔ یہ اس پر بھی منحصر ہے کہ آپ کیا کھاتے ہیں۔

نیویارک کی ماہر امراض جلد ڈاکٹر فرانسسکا فوسکو بتاتی ہیں کہ بالوں کی نشوونما بڑھانے کے لیے آپ کو اندر سے بھی ان کی پرورش کرنی ہوگی۔

لیکن کون سی غذائیں بالوں کی تیز نشوونما کا باعث بنتی ہیں؟

اس کا جواب یہ ہے کہ وہ جن میں پروٹین زیادہ ہوتے ہیں۔ ان میں گوشت اور دیگر پروٹین فراہم کرنے والے ذرائع شامل ہیں۔

ڈاکٹر فوسکو کا مشورہ ہے کہ ’پروٹین کی مقدار بڑھانے کے لیے مچھلی، پھلیاں اور گری دار میوے اپنی خوراک میں شامل کریں۔

پروٹین سے بھرپور غذاؤں کے علاوہ وٹامن اے، سی ، زنک اور آئرن جیسے منرلز اور اومیگا تھری فیٹی ایسڈ بھی بالوں کو صحت مند رکھنے میں مدد دے سکتے ہیں۔

بہت سی وجوہات کی بنا پر آپ کو’ بالوں کی کلینزنگ‘ کرنے والی فیشن ایبل غذا سے گریز کرنا چاہیے۔

ہیر ڈریسر ڈوئناس نے خبردار کیا ہےکہ ’بالوں کی کلینزنگ خوف ناک ہے کیونکہ آپ اپنے جسم کو غذائی اجزا سے محروم کر رہے ہیں۔

اپنے صبح کے معمولات میں وٹامن شامل کریں

اگر غذا سے آپ کو کافی غذائی اجزا نہیں ملتے تو ایک سپلیمنٹ لینے سے نتائج مختلف ہو سکتے ہیں۔

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

ڈاکٹر فوسکو تجویز کرتی ہیں: ’ایک ایسا ملٹی وٹامن لیں جو بالوں، جلد اور ناخنوں کے لیے ہو۔‘

ان میں بائیوٹن، سی 3 اور بائیو جیسے اہم وٹامنز ہوتے ہیں جن سے بال صحت مند رہتے ہیں۔ اس سےآپ کی جلد بہتر ہو جائے گی۔

شیمپو کم اور ہائیڈریٹ زیادہ

حقیقت یہ ہے کہ آپ کا اپنے بالوں کو ہر بار شیمپو کرنا ان کی صحت کو متاثر کرتا ہے۔

ہفتے میں دو سے تین بار بالوں کو شیمپو کرنے سے قدرتی تیل آپ کے بالوں میں چلا جاتا ہے۔ اس سے بالوں کی خوبخود مرمت انہیں ہائیڈریٹ کرنے میں مدد ملتی ہے۔

گھنے بال تیزی سے لمبے کرنے کے لیے ایسے شیمپو کا انتخاب کریں جس پر’ گھنے بال‘ کا لیبل لگا ہو۔

دیگر سفارشات

اپنے بالوں کو بلیچ نہ کریں

اپنے بالوں کا سٹائل بنانے کے لیے زیادہ گرم ہوا استعمال نہ کریں

اپنے بالوں کو برش کریں

نہاتے وقت پانی کو ٹھنڈا کریں اور اپنے سر کی دیکھ بھال پر توجہ دیں

بالوں کو نقصان سے محفوظ رکھیں

ریشم کے تکیے استعمال کریں

نوٹ: یہ مضمون محض عام معلومات کے لیے ہے، بالوں کی صحت کے متلعق طبی ماہرین کی ہدایات پر عمل کریں۔

زیادہ پڑھی جانے والی صحت