دروازہ کھولنے کی کوشش پر خاتون کو جہاز کی سیٹ سے باندھ دیا گیا

امیریکن ایئر لائنز کے ترجمان کے مطابق خاتون نے جہاز کا داخلی دروازہ کھولنے کی کوشش کی اور عملے کے ایک رکن کو جسمانی تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے انہیں کاٹ کر زخمی کر دیا تھا۔

 ایئر لائن نے اپنے عملے کے پیشہ ورانہ رویے اور جہاز میں موجود افراد کی حفاظت کے لیے اٹھائے جانے والے فوری اقدامات پر ان کی تعریف کی ہے(فائل فوٹو: اے ایف پی)

امیریکن ایئر لائن کی ایک پرواز میں ایک خاتون کو باقاعدہ طور پر ان کی کرسی کے ساتھ ٹیپ کی مدد سے باندھ دیا گیا۔ کمپنی کے مطابق ایسا مذکورہ خاتون کی جانب سے جہاز کا دروازہ کھولنے کی کوشش اور عملے کے ایک رکن پر تشدد کرنے کے بعد کیا گیا۔

اس حیران کن واقعے کی ابتدائی ویڈیو ٹک ٹاک پر پوسٹ کی گئی جو اتوار کو ٹوئٹر تک پہنچ گئی۔ اس آرٹیکل کی اشاعت تک اصل ویڈیو کو حاصل نہیں کیا جا سکا۔

امیریکن ایئر لائنز کے ترجمان نے دی انڈپینڈنٹ کو جاری کیے جانے والے ایک بیان میں تصدیق کی ہے کہ ایک خاتون (جن کا نام ظاہر نہیں کیا گیا) کو عملہ ارکان نے رات گئے ڈیلاس، ٹیکسس سے شارلوٹ، نارتھ کیرولینا جانے والی پرواز پر باندھ دیا تھا۔

کمپنی ترجمان کے مطابق: ’چھ جولائی کو ڈیلاس کے فورٹ ورتھ (ڈی ایف ڈبلیو) ہوائی اڈے سے شارلوٹ (سی ایل ٹی) جانے والی امیریکن ایئرلائن کی پرواز 1774  کے عملے نے دوران پرواز ایک ممکنہ سکیورٹی خدشے کا اظہار کیا جب ایک خاتون مسافر نے جہاز کا داخلی دروازہ کھولنے کی کوشش کی اور ایک عملہ رکن کو جسمانی تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے انہیں کاٹ کر زخمی کر دیا۔‘

مزید پڑھ

اس سیکشن میں متعلقہ حوالہ پوائنٹس شامل ہیں (Related Nodes field)

بیان میں مزید کہا گیا کہ ’پرواز میں جانے والے دیگر مسافروں اور عملے کی حفاظت اور سکیورٹی کے پش نظر مذکورہ مسافر کو شارلوٹ میں جہاز کے لینڈ کرنے اور قانون نافذ کرنے والے اداروں اور ہنگامی حالات سے نمٹنے والے محکمے کی آمد تک سیٹ سے باندھ دیا گیا۔ ہم اپنے عملے کے پیشہ ورانہ رویے اور جہاز میں موجود افراد کی حفاظت کے لیے اٹھائے جانے والے فوری اقدامات پر ان کی تعریف کرتے ہیں۔‘

اتوار کو ٹک ٹاک پر ’آریانا میتھینا‘ نامی اکاؤنٹ کا ایک سکرین گریب ٹوئٹر پر لائف سٹائل انفلونسر مائیک سنگٹن نے پوسٹ کیا جس میں ایک خاتون کو سلور رنگ کی ڈکٹ ٹیپ سے اپنی نشست پر بندھے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔ ان کے ہاتھوں کو بھی ایک نامعلوم چیز سے ان کی پشت پر باندھا گیا تھا جب کہ ان کا منہ بھی ڈکٹ ٹیپ سے بندھا ہوا تھا۔  

امیریکن ایئر لائنز کے بیان میں اس بات کی وضاحت نہیں کی گئی کہ آیا کسی مسافر نے بھی خاتون کو باندھنے میں عملے کی مدد کی ہے۔

کمپنی کے مطابق شارلوٹ میکلین برگ پولیس ڈیپارٹمنٹ کے اہلکار گیٹ پر پرواز کا انتظار کر رہے تھے، جنہوں نے باقی مسافروں کے اترنے کے بعد مذکورہ خاتون کو معائنے کے لیے ہسپتال منتقل کیا۔

ترجمان کے مطابق مذکورہ خاتون کو ایئرلائن کی اندرونی فہرست میں بکنگ کے لیے مسترد کر دیا گیا تھا۔ خاتون کے خلاف قانونی کارروائی کے سوال کا جواب حاصل کرنے کے لیے پولیس سے رابطے کی کوشش کی گئی جو کامیاب نہیں ہو سکی۔

© The Independent

زیادہ پڑھی جانے والی امریکہ